0

آئی ایم ایف سے معاملات اگست میں حل ہوجائیں گے، وزیرخزانہ

اسلام آباد: وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل کا کہنا ہے کہ عالمی مالیاتی ادارے(آئی ایم ایف) سے معاملات اگست میں حل ہوجائیں گے۔

وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل نے کارپوریٹ گورننس سے متعلق سیمینار سے خطاب میں کہا کہ آئی ایم ایف سے معاملات اگست میں حل ہوجائیں گے۔ آئی ایم ایف نے اینٹی کرپشن قوانین پر عملدر آمد کی ہدایت کی ہے تاہم اینٹی کرپشن قوانین آئی ایم ایف کا ترجیحی ایکشن نہیں ہے۔

وزیر خزانہ کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان کی مالیاتی ضروریات پوری کرنے کے لئے دوست ممالک سے بات چیت چل رہی ہے۔ حکومت کے ملکیتی اداروں اور کمپنیوں کے کچھ حصص فروخت کئے جائیں گے جس کی منظوری دی جا چکی ہے۔دوست ممالک نے یہ شیئرز خریدنے میں دلچسپی کا اظہارکیا ہے۔ حصص کی فروخت سے فنانسنگ گیپ کو پورا کیا جائےگا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں پیٹرولیم مصنوعات کی درآمدات میں کمی آئی ہے۔پاکستان کے پاس پٹرولیم مصنوعات کے ایک ماہ کے ذخائر ہیں۔حکومت پائیدار ترقی کے لئے کوشش کررہی ہے۔

مفتاح اسماعیل نے کہا کہ پاکستان ڈیفالٹ سے بچ گیا لیکن قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے۔ خوردنی تیل کی قیمتوں میں اضافہ مہنگائی کا سبب بنا ہے۔ ڈالرکی قدر میں تاریخی اضافے کے باعث شرح سود میں بھی اضافہ کرنا پڑا۔کورونا کے بعد روس اوریوکرین کی جنگ کی وجہ سے پاکستان کو مشکلات کا سامنا ہے۔

وزیرخزانہ نے کہا کہ قوم کو جلد خوش خبری ملنے والی ہے۔ ابھی ترجیح معیشت کی بہتری ہے چند ماہ بعد عوا م کو نوکریاں بھی ملیں گی۔جے پی مورگن نے پاکستان کے بانڈ میں سرمایہ کاری میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔دوست ممالک اب پاکستان میں سرمایہ کاری کرنے جارہے ہیں۔ دوست ممالک کو شیئرز میں انتظامی امور دینا نہیں چاہتے۔ہم سب کو ماضی کی غلطیوں سے سیکھنا ہوگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں