0

ڈپٹی اسپیکر کی جانب سے پنجاب اسمبلی کا اجلاس آج طلب، اسپیکر نے غیر آئینی قرار دیدیا

لاہور: ڈپٹی اسپیکر دوست محمد مزاری نے پنجاب اسمبلی کا اجلاس آج شام ساڑھے سات بجے طلب کرلیا جبکہ ترجمان اسپیکر پنجاب اسمبلی نے اجلاس کو غیر آئینی قرار دے دیا۔

ڈپٹی اسپیکر سردار دوست مزاری نے رات گئے اجلاس بلانے کا نوٹیفکیشن جاری کیا۔ انہوں نے اجلاس طلب کرنے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ سپریم کورٹ میں ایڈووکیٹ جنرل نے اجلاس آج ہونے کی یقین دہانی کرائی تھی، میں نے اپنے وکیل سے مشورہ کرنے کے بعد اجلاس طلب کرنے کا فیصلہ کیا، آج اجلاس میں وزیراعلیٰ پنجاب کا انتخاب ہوگا۔

دوسری جانب ترجمان اسپیکر پنجاب اسمبلی ڈاکٹر زین علی بھٹی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق اجلاس آج نہیں 16 اپریل کو ہوگا، آج طلب کیے جانے والے اجلاس کا کوئی نوٹی فکیشن نہیں ہے، ڈپٹی اسپیکر کی طرف سے طلب کیا گیا اجلاس غیر آئینی ہے، آفیشل لیٹر جب تک جاری نہیں ہوتا اس وقت تک پہلا آرڈر رہے گا، گزشتہ اجلاس میں توڑ پھوڑ کی وجہ سے مرمت کا کام جاری ہے۔

اس بیان پر ردعمل میں ڈپٹی اسپیکر پنجاب اسمبلی سردار دوست محمد مزاری نے کہا کہ یہ جعلی نہیں بلکہ اصلی نوٹی فکیشن ہے اور میرے دستخط سے جاری ہوا ہے، آج پنجاب اسمبلی کا اجلاس بالکل ہوگا،سپریم کورٹ کے حکم پر اجلاس بلایا ہے کیونکہ ایڈووکیٹ جنرل نے کل سپریم کورٹ کو بیان دیا تھا، 16 اپریل والا بھی میرا ہی نوٹیفیکیشن تھا جسے ختم کردیا گیا ہے، ن لیگ میں جانے کی بات غلط ہے۔

ادھر اسمبلی سیکرٹریٹ میں غیر معمولی سرگرمیاں ہورہی ہیں۔ اسمبلی سیکرٹریٹ کے اندر پولیس کی بھاری نفری تعینات کر دی گئی اور پنجاب اسمبلی کو سیل کرنے کی اطلاعات ہیں۔ اسپیکر چوہدری پرویز الٰہی کی ہدایت پر پنجاب اسمبلی میں میڈیا کے داخلے پر پابندی لگادی گئی۔ اسمبلی سیکورٹی نے میڈیا کو مین گیٹ پر ہی روکتے ہوئے کہا ہے کہ اسپیکر کی ہدایت کی روشنی میں میڈیا اسمبلی کے اندر نہیں جاسکتا۔ اسمبلی سیکرٹریٹ میں کیا ہو رہا ہے عوام اور میڈیا لاعلم ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں